الیکشن سے پہلے انصاف، نواز شریف کیساتھ زیادتیوں کا ازالہ، گھڑی چور کٹہرے میں ہو گا، مریم نواز

الیکشن سے پہلے انصاف، نواز شریف کیساتھ زیادتیوں کا ازالہ، گھڑی چور کٹہرے میں ہو گا، مریم نواز

ساہیوال: پاکستان مسلم لیگ (ن) کی چیف آرگنائزر مریم نواز نے کہا ہے کہ یہ الیکشن کا سال ہے، ن لیگ بھاری اکثریت سے الیکشن جیتے گی، الیکشن ضرور ہو گا لیکن پہلے انصاف ہو گا۔

پلستر شدہ ٹانگ آپ کو مزید نہیں بچائے گی اٹھو اور قانون کا سامنا کرو، مریم نواز

انہوں نے ن لیگ کے ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ الیکشن سے پہلے دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہوگا، الیکشن ہوگا مگر ترازو کے دونوں پلڑے برابر ہوں گے، الیکشن ضرور ہوگا مگر پہلے نوازشریف کے ساتھ ہونے والی زیادتیوں کا ازالہ ہوگا، پہلے گھڑی چور کٹہرے میں ہوگا، پھر الیکشن ہوگا۔

مریم نواز نے استفسار کیا کہ اگر نوازشریف یہ گھڑیاں بیچ دیتا تو اس کے ساتھ کیا سلوک کیا جاتا؟ انہوں نے مطالبہ کیا کہ 55 ارب روپے جیب میں ڈالنے والے شخص کو انصاف کے کٹہرے میں کھڑا کرو۔

انہوں نے کہا کہ نوازشریف کوسزا دینے والے ججز نے خود غلطی کا اعتراف کیا، جو شخص عدالتوں میں نہیں جاتا اس کو کون بچا رہا ہے؟ اس شخص کو جنرل فیض کی باقیات بچارہی ہے، فیض حمید چکوال میں بیٹھ کر اس کا ساتھ دے رہا ہے۔

ن لیگ کی چیف آرگنائزر نے کہا کہ عمران خان کا دوسرا نام گھڑی چور ہے، ایک نام فتنہ خان بھی ہے، اس کو لانے والے جانتے تھے کہ وہ تباہی کا دوسرا نام ہے، نہ اس کے پاس کردار تھا نہ اس کے پاس کارکردگی تھی لیکن تم نے نواز شریف کی نفرت میں پاکستان تباہ کر دیا، شرم کرو۔

مریم نواز نے کہا کہ جیسے چاند کو گرہن لگتا ہے اسی طرح پاکستان کو پانامہ بینچ لگ گیا، ایک بینچ بن گیا جس کا نام تھا پانامہ بینچ جس میں پانچ ججز تھے، نوازشریف کے ساتھ دشمنی میں پاکستان کو نقصان پہنچایا گیا، آج ہم سب پانامہ بینچ سے جواب مانگ رہے ہیں، نواز شریف کو بیٹے سے تنخواہ نہ لینے پر چلتا کیا،جس کو کہتے ہیں غیر سیاسی عورت ہے اس نے ایک دستخط کے بدلے 5 قیراط کا ہیرا رشوت میں لیا، 5 قیراط کا ہیرا رشوت میں لینے والے کو پہلے کٹہرے میں کھڑے کرو، نواز شریف کے فیصلے آج بھی جوں کے توں ہیں، وہ فتنہ جس کے ہاتھ جرائم میں ڈوبے ہوئے ہیں اس کو کسی عدالت کو بلانے کی ہمت نہیں ہوتی۔

اعلیٰ عدلیہ کا دوہرا میعار قبول نہیں،نیب قانون ججز پر بھی لاگو کیا جائے، بلاول بھٹو

انہوں نے کہا کہ ڈیم والا بابا زحمت جوڈیشری میں اپنے لگائے مہروں سے آج بھی کام لے رہا ہے،  چودھری پرویز الہٰی اسمبلی توڑنا نہیں چاہتا تھا، وہ کھیلنے کو چاند مانگتا تھا انہوں نے 22 کروڑ کا ملک اس کے ہاتھ میں پکڑا دیا،
پانامہ کا جھوٹا مقدمہ چل رہا تھا تو عمران خان اشتہاری تھا، یہی اشتہاری ٹانگ پر ٹانگ رکھ کر پانامہ کا مقدمہ روز سننے آتا تھا لیکن پانامہ بینچ میں شامل کسی جج کو ہمت نہیں ہوئی کہ اس کو گرفتاری کرتا، اگر ملک ایک ، آئین ایک اور ریاست ایک ہے تو پھر انصاف کیلئے دو نظام کیوں؟

ن لیگ کی چیف آرگنائزر نے کہا کہ آج بھی یہ شخص عدالتوں سے بھاگا ہوا ہے، عدالت بلاتی ہے تو بلستر دکھا دیتا ہے، یہ کیسا پلستر ہے جو 5 مہینے سے اترنے کا نام نہیں لے رہا ہے؟ نواز شریف کیلئے 200 پیشیاں، ہفتے میں 6 دن عدالت لگتی تھی، نواز شریف کے خلاف مقدمے خرگوش کی رفتار سے دوڑتے تھے، اس فتنے کے مقدمے کچھوے سے بھی کم رفتار پر چل رہے ہیں، جو سر سے پاوں تک جرائم میں ڈوبا ہواہےاس کو عدالتوں میں نہیں بلایا جا رہا ہے، یہ لوگ دو روز کی جیل کاٹ کر آتے ہیں تو ٹی وی پر بیٹھ جاتے ہیں، جو آگے آگے لیڈ کرے وہ لیڈر ہوتا ہے جو پیچھے چھپ جائے وہ گیدڑ ہوتا ہے۔

مریم نواز نے سابق وزیراعظم پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اس کو چاہیے کہ انتخابی نشان بلے کی جگہ چوہا رکھ لے،ہمارے کارکنان آج بھی جھوٹے مقدمات میں جیل جاتے ہیں مگر روتے نہیں ہیں، یاسمین راشد کہتی ہیں گھبراؤ نہیں سپریم کورٹ میں ہمارے بندے بیٹھے ہیں، تم لوگ بے فیض ہوچکے ہو اب کوئی فیص جواب نہیں دے رہا ہے، عمران خان کی بھی 200 پیشیاں ہوں گی پھر الیکشن ہوگا، خود جیبیں بھریں اور کارکنوں کو کہتے ہیں جیلیں بھرو، ٹانگ پر بلستر چڑھا کر چوہے کی طرح چھپ کر بیٹھنے والا ہمارا لیڈر نہیں ہو سکتا۔

ن لیگ کے قائد میاں نواز شریف کی صاحبزادی  مریم نواز نے ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف کے دور میں روٹی 2 روپے اور چینی 50 روپے فی کلو تھی، آٹا 35 اور گھی کی قیمت 140 روپے فی کلو تھی، بجلی 11 روپے فی یونٹ اور پیٹرول 65 روپے فی لیٹر تھا، نواز شریف نے 22،22 گھنٹے کی لوڈشیڈنگ سے نجات دلائی، ن لیگ کے دور میں دہشت گردی کی لعنت کو ختم کیا گیا، موٹر ویز بنائے گئے، آئی ایم ایف سے بھی ڈیل کی لیکن بوجھ عوام پر نہیں ڈالا۔

عمران خان کیلئے قانون اور مریم نواز کیلئے اور ہے، پاکستان کو بلیک میلر حکومت کا سامنا ہے، فواد چودھری

انہوں نے کہا کہ نواز شریف کو اللہ نے 3 مرتبہ منتخب وزیراعظم بنایا، انہوں نے پاکستان کو ایٹمی طاقت بنایا، جب نواز شریف وزیراعظم بنے تو پاکستان نے اوپر کی طرف ٹیک آف کیا، ملک کو ترقی کی راہ پر ڈالا لیکن جب انہیں حکومت سے نکالا گیا تو ملک نیچے کی طرف گیا۔ انہوں نے کہا کہ جب نواز شریف کو حکومت سے نکالا گیا تو اس وقت سے ملک سنبھالنے میں نہیں آرہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کے سب سے بڑے چور نے ملک میں گھڑیاں تک نہیں چھوڑیں۔


متعلقہ خبریں