ڈیرہ خودکش حملے میں استعمال ہونیوالی گاڑی اور حملہ آور کا پتہ چلا لیا گیا


ڈیرہ اسماعیل خان خودکش حملے کی تحقیقات میں اہم پیشرفت سامنے آئی ہے۔

سی ٹی ڈی دستاویز کے مطابق حملے میں استعمال ہونے والی گاڑی و انجن نمبرکا پتہ چلا لیا گیا ہے، گاڑی کے انجن پارٹس وہیکل ٹیمپرنگ چیک کیلئے لیبارٹری بھیجوا دیے گئے ہیں  ، گاڑی جس کے نام رجسٹرڈ ہے اس کا بھی جلد پتہ چل جائے گا۔

ڈی آئی خان ، گیس تلاش کرنیوالی کمپنی کے قافلے پر حملہ ، پولیس اہلکار جاں بحق ، 12 افراد زخمی

دستاویز میں بتایا گیا ہےکہ حملے میں مرنے والا دہشتگرد صفت اللہ مروت 3 مارچ کو طورخم بارڈر سے افغانستان گیا تھا، صفت اللہ کی موبائل لوکیشن 7 مارچ کو بنارس آباد پشاور ، 8 مارچ کو جمرود ضلع خیبر، 25 اپریل کو ڈانڈے درپہ خیل میرانشاہ تھی۔

دستاویز کے مطابق دہشتگرد صفت اللہ کے نام تین مختلف موبائل کمپنیوں کی سم رجسٹرڈ تھی، صفت اللہ کا شناختی کارڈ، ڈومیسائل اور دیگر دستاویزات موصول ہوگئی ہیں، صفت اللہ کا تعلق امارت اسلامی افغانستان سے ہے۔

ڈیرہ اسماعیل خان میں پولیس چیک پوسٹ پر حملہ ناکام بنا دیا گیا

دہشتگرد حملے میں 2 خودکش حملہ آوروں سمیت کل 4 دہشتگرد ہلاک ہوئے، حملے میں ملوث 6 دہشتگردوں کا تعلق افغانستان سے ہے، 5 دہشتگرد کالعدم ٹی ٹی پی گنڈاپور گروپ سے بھی حملے میں ملوث تھے۔

 


متعلقہ خبریں