فواد چوہدری چوتھی مرتبہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے

لوگوں کو چاہیے اپنا کاروبار کریں، فواد چوہدری

احتساب عدالت نے سابق وزیر اطلاعات فواد چوہدری کو چوتھی مرتبہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کر دیا۔

اسلام آباد کی احتساب عدالت کے ڈیوٹی جج شاہ رخ ارجمند نے جہلم میں تعمیراتی منصوبوں میں خورد برد کے کیس کی سماعت کی ، نیب پراسیکیوٹر اور وکیل صفائی عدالت نے دلائل دیے ، پولیس نے جسمانی ریمانڈ ختم ہونے پر ملزم کو عدالت میں پیش کیا۔

عدالت نے استفسار کیا کہ فواد چوہدری کا اب تک کتنے دن کا جسمانی ریمانڈ ہو چکا ہے؟  نیب پراسیکیوٹر نے بتایا کہ اب تک 20 روزکا جسمانی ریمانڈ ہو چکا ہے۔

توہین الیکشن کمیشن کیس ، عمران خان اور فواد چوہدری پر فرد جرم عائد

وکیل صفائی نے ڈیوٹی جج کی جانب سے سماعت کرنے پراعتراض اٹھاتے ہوئے  کہا کہ احتساب عدالت کے جج محمد بشیرڈیوٹی پر ہیں اور اڈیالہ جیل میں موجود ہیں، استدعا ہے جج محمد بشیرکے آنے تک سماعت میں وقفہ کیا جائے۔

نیب پراسیکیوٹر نے مزید 10 روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی جس کی وکیل صفائی نے مخالفت کی تاہم عدالت نے سابق وزیر کا مزید تین روز کا جسمانی ریمانڈ منظور کرتے ہوئے انہیں نیب کی تحویل میں دے دیا۔

دریں اثنا کمرہ عدالت میں صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ بانی پی ٹی آئی عمران خان نے الیکشن کمیشن حکام کوکوئی دھمکی نہیں دی۔

حلقہ این اے 61 جہلم سے فواد چوہدری کے کاغذات نامزدگی مسترد

فواد چوہدری نے اہلیہ حبا کی الیکشن لڑنے کے لیے نااہلی کے حوالےل سے  کہا کہ میرے اور حبا دونوں کے تمام بینک اکاؤنٹس ڈکلیئرڈ ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان نے ممبرالیکشن کمیشن سندھ سے کہا تھا آپ کے خلاف جوڈیشل کونسل میں ریفرنس پینڈنگ پڑا ہے۔ عمران خان نے کہا تھا کہ 90 دن میں انتخابات نہ کرانے پرسپریم کورٹ کے جسٹس اطہرمن اللہ نے نوٹ لکھا تھا ، سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق وقت پرانتخابات نہ کروانے پر آرٹیکل 6 لگے گا۔

نواز شریف بری، احتساب عدالت کی سزا کالعدم

ایک صحافی نے سوال کیا کہ کیا جیل سے بانی پی ٹی آئی کے غیرملکی جریدے کیلئے کالم لکھنے کی بات درست ہے؟ اس پر فواد چوہدری نے کہا کہ مجھے کنفرم نہیں لیکن دوران سماعت بانی پی ٹی آئی وکلا کو نوٹس دے سکتے ہیں، یقیناً لکھوایا ہو گا۔


متعلقہ خبریں