لیگی رہنما میاں نوید علی کا آزاد حیثیت سے الیکشن لڑنے کا اعلان

ٹکٹ ہولڈر

پاکستان مسلم لیگ(ن)کے رہنما میاں نوید علی نے پارٹی کی جانب سے ٹکٹ نہ ملنے پر عام انتخابات 2024 میں آزاد حیثیت سے حصہ لینے کا اعلان کر دیا۔

پنجاب کے ضلع پاکپتن سے تعلق رکھنے والے سابق لیگی ممبر پنجاب اسمبلی میاں نوید علی ٹکٹ نہ ملنے پر پارٹی سے ناراض ہوگئے ہیں جس کے بعد انہوں نے آزاد حیثیت سے انتخاب لڑنے کا اعلان کیا ہے۔

مسلم لیگ ن نے پنجاب سے اپنے امیدواروں کا اعلان کر دیا

میاں نوید علی کا کہنا تھا کہ پارٹی نے ہماری وفاداریاں نظرانداز کر کے چوہدری جاوید کو ٹکٹ دی، جب کوئی فرنٹ پیج پر نہیں آرہا تھا تو میرے والد نے پارٹی کا ساتھ دیا، ن لیگ کیلئے ہم نے ظلم و زیادتی برداشت کیں اور جیلیں بھی دیکھیں۔

میاں نوید علی کا مزید کہنا تھا کہ 10سال تک پارٹی کو سنبھالا لیکن پارٹی کو شاید کچھ اور ہی عزیز تھا، پارٹی نے میرے ساتھ وفا نہیں کی لیکن ہم الیکشن جیت کر بھی وفا کریں گے۔

علاوہ ازیں پاکستان مسلم لیگ (ن)کی خاتون رہنما عائشہ رجب علی نے بھی چند روز قبل 2024 کے الیکشن آزاد حیثیت سے لڑنے کا اعلان کیا تھا۔

گلیپ سروے، الیکشن 2024، پی ٹی آئی مقبولیت کھونے کے باوجود ن لیگ سے آگے

انکا کہنا تھا کہ ہماری پارٹیاں کیلئے قربانیاں کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہیں۔ میں نے پارٹی کے تمام جلسوں اور کارنر میٹنگزسمیت بڑے قافلوں میں شرکت کی اور ہر فورم پر پارٹی کو متحرک کرنے کیلئے کردار ادا کیا ہے لیکن پارٹی کی جانب سے یکسر نظرانداز کیاگیا۔

عائشہ رجب علی کاکہنا تھا2024 کے عام انتخابات میں قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 97 تاندلیانوالہ سے آزاد حیثیت سےمیں حصہ لوں گی۔

خیال رہے کہ پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما دانیال عزیز نے بھی پارٹی ٹکٹ نہ ملنے پر آزاد حیثیت میں الیکشن لڑنے کا اعلان کیاتھا۔


متعلقہ خبریں